پیر‬‮   15   اکتوبر‬‮   2018

بیرسٹر فروغ نسیم نے ساتھیوں سے کہا فاروق بھائی میں دم نہیں ، سربراہ متحدہ

کراچی( اوصاف نیوز) متحدہ قومی موومنٹ پاکستان ( پی آئی بی ) کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار نے ایم کیو ایم کی تقسیم اور ٹوٹ پھوٹ کی وجہ بتادی، متحدہ کنوینر نے انکشاف کیا کہ سارے جھگڑے کا سبب پرویز مشرف فارمولا اور سازش ہے، وہ اپنی سیاست کے لئے ایم کیو ایم کو استعمال کرنا چاہتے ہیں، میرے پاس اس سازش کے تمام ثبوت موجود ہیں، ڈاکٹر فاروق ستار نے مزید انکشاف کیا کہ بیرسٹر فروغ نسیم اس پلاننگ کا حصہ ہیں، انہوں نے متحدہ کے رہنماؤں کو سابق صدر مشرف کو جوائن کرنے کا مشورہ دیتے ہوئے انہیں کہا کہ فاروق ستار بھائی میں دم نہیں ، وہ پارٹی نہیں چلا سکتے، نہ مہاجروں کی قیادت کر سکتے ہیں، ہمیں ایک مضبوط قیادت اور طاقتور لیڈر شپ چاہئے جو پرویز مشرف ہی دے سکتے ہیں۔ متحدہ سربراہ کا کہنا تھا کہ سابق صدر 22اگست کے بعد ہی ایم کیو ایم پر قبضہ کرنا چاہتے تھے، مگر کارکنوں کے لے قابل قبول نہ تھا اور اب بھی کارکن مشرف فارمولا قبول نہیں کریں گے، رابطہ کمیٹی کے عاقب اندیشوں کو احساس نہیں کہ وہ میرے خلاف اقدامات کرکے کسی اور کے ہاتھوں میں کھیل رہے ہیں، اس طرح پارٹی اور قوم کو نقصان پہنچے گا، دریں اثناء ایم کیو ایم ( بہادرآباد) کے رہنما بیرسٹر فروغ نسیم نے اپنے معزول سربراہ کے الزام کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ جنرل(ر) پرویز مشرف اچھے انسان ہیں، میرے بھائیوں جیسے ہیں، ان کی الگ جماعت ہے اور میں الگ جماعت میں ہوں، ان کا کہنا تھا کہ وہ ڈاکٹر فاروق ستار کی بہت عزت کرتے ہیں، ان سے کشیدگی ختم کرنے کی گزارش کرتا ہوں اور ان سے ان کے ساتھیوں سے درخواست کرتا ہوں کہ خدارا مل بیٹھیں، پھر ایک ہوجائیں، اختلافات اورتناؤ سے کراچی و سندھ کے عوام کا نقصان ہو رہا ہے ۔ علاوہ ازیں سابق صدر پرویز مشرف اور آل پاکستان مسلم لیگ کے ترجمان نے بھی ڈاکٹر فاروق ستار کے الزام کو غلط قرار دیتے ہوئے اس کی تردید کی ہے اور کہا ہے کہ ایم کیو ایم کے سارے معاملے اور تنازع سے جنرل صاحب کا کوئی تعلق نہیں ہے، وہ پہلے بھی ایم کیو ایم کی سربراہی سنبھالنے کی تردید کر چکے ہیں، ایم کیو ایم کو اپنے اندرونی معاملات خود سنبھالنے چاہئیں، دوسروں پر الزام نہ لگائیں۔


© Copyright 2018. All right Reserved