بدھ‬‮   15   اگست‬‮   2018

جماعت الدعوہ اور فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کیخلاف آپریشن شروع کئی مراکز پر حکومتی کنٹرول

 

حکومت پنجاب نے چکری روڈ پر مدرسہ حدیبیہ ، 4 صحت کے مراکز کا کنٹرول سنبھال لیا،قانونی جنگ لڑیں گے‘جماعت الدعوۃ

اسلام آباد(خصوصی نیوز رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک)بڑھتے ہوئے عالمی دباؤپر حکومت نے جماعت الدعوۃ اورفلاح انسانیت فاؤنڈیشن کیخلاف آپریشن کاآغازکردیا۔ حکومت پنجاب نے راولپنڈی میں جماعت الدعوۃ کے زیر انتظام مدارس اور صحت کے مراکز کا کنٹرول اپنےباہاتھ میں لینا شروع کردیا۔ مہم کے دوران حکومت پنجاب نے راولپنڈی کے چکری روڈ پر واقع مدرسہ حدیبیہ کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لے کر محکمہ اوقاف کو اس کے انتظامی امور کی ذمہ داری سونپ دی۔ دوسری جانب ضلعی انتظامیہ نے بھی شہر میں موجود جماعت الدعوۃکے فلاحی ادارے فلاح انسانیت فانڈیشن کے زیر انتظام 4 صحت کے مراکز کا کنٹرول بھی اپنے ہاتھ میں لے لیا۔ تفصیلات کے مطابق بڑھتے ہوئے عالمی دباؤپر حکومت نے جماعت الدعوۃ اورفلاح انسانیت فاؤنڈیشن کیخلاف آپریشن کاآغازکردیا۔ وفاقی حکومت کی جماعت الدعوۃ اور فلاح انسانیت فانڈیشن کے اثاثے منجمد کرنے کی ہدایت کے بعد حکومت پنجاب نے راولپنڈی میں جماعت الدعوۃ کے زیر انتظام مدارس اور صحت کے مراکز کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لینا شروع کردیا۔ مہم کے دوران حکومت پنجاب نے راولپنڈی کے چکری روڈ پر واقع مدرسہ حدیبیہ کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لے کر محکمہ اوقاف کو اس کے انتظامی امور کی ذمہ داری سونپ دی۔ دوسری جانب ضلعی انتظامیہ نے بھی شہر میں موجود جماعت الدعوۃکے فلاحی ادارے فلاح انسانیت فانڈیشن کے زیر انتظام 4 صحت کے مراکز کا کنٹرول بھی اپنے ہاتھ میں لے لیا ۔حکومت نے تمام صوبوں کو بھی اس حوالے سے اقدامات اٹھانے کی ہدایت کی ہے۔ وفاقی حکومت نے کمپنیوں اور مخیر حضرات کو بھی جماعت الدعوۃ، ایف آئی ایف اور اقوامِ متحدہ کی سیکیورٹی کونسل کی جانب سے جاری کردہ کالعدم تنظیموں کی فہرست میں شامل جماعتوں کو چندہ دینے سے روک دیا۔ راولپنڈی کی ضلعی انتظامیہ کے ایک اعلیٰ حکام نے بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ صوبائی حکومت کی جانب انہیں 4 مدارس کے نام موصول ہوئے جس کے بعد انتظامیہ نے ان مدارس کا دورہ کیا، جس کے حوالے سے جماعت الدعوۃ نے تردید کی کہ جماعت کا ان مدارس کے ساتھ کوئی تعلق نہیں ہے۔ انہوں نے بتایا کہ صوبائی حکومت کی جانب سے مدرسہ حدیبیہ کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لے لیا گیا ہے جو ایک سکول، کالج اور مدرسے پر محیط ہے۔ راولپنڈی کی ضلعی انتظامیہ کے حکام کا مزید کہنا تھا کہ حکومت نے حدیبیہ مدرسے کی مالی امداد اور اس کے اخراجات کی جانچ کرنے کے لیے اس کا آڈٹ بھی شروع کردیا۔ انہوں نے بتایا کہ صوبائی حکومت کی جانب سے ضلعی انتظامیہ کو حکم دیا گیا ہے کہ وہ مذکورہ مدرسے میں تعلیم حاصل کرنے والے طلبہ اور یہاں درس دینے والے اساتذہ کے تفصیلات سے آگاہ کریں۔ ان کا کہنا تھا کہ صوبائی حکومت کی جانب سے یہ بھی حکم دیا گیا ہے کہ ایف آئی ایف کے زیرِ انتظام صحت کے مراکز میں کام کرنے والے ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل اسٹاف کی تفصیلات حاصل کرکے آگاہ کیا جائے۔ ضلعی انتظامیہ کے حکام نے بتایا کہ حکومت نے اس کام کو انجام دینے کے لیے پولیس، محکمہ اوقاف اور ضلعی انتظامیہ کے افسران پر مشتمل ایک ٹیم بھی تشکیل دے دی۔ انہوں نے بتایا کہ اسی طرح کی کارروائیوں کا آغاز صوبے کے دیگر اضلاع اٹک، چکوال اور جہلم میں بھی کیا جائے گا۔ راولپنڈی کے ڈپٹی کمشنر طلعت محمود گوندل نے بات چیت کرتے ہوئے تصدیق کی کہ صوبائی حکومت نے جماعت الدعوۃ اور ایف آئی ایف کے زیرِ انتظام مدارس اور صحت کے مراکز کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لے لیا۔ انہوں نے بتایا کہ مدارس کو محکمہ اوقاف کے سپرد کردیا گیا ہے جبکہ صحت کے مراکز کی ذمہ داریاں محکمہ صحت کو دے دی گئیں ہیں، تاہم جماعت الدعوۃکے زیر انتظام تعلیم اور صحت کی سہولیات اب سے حکومت دیکھے گی۔ محکمہ اوقاف کے علاقائی منتظم زاہد اقبال کا کہنا تھا کہ ان مدارس میں تعلیم کے لیے حکومت نے اہلِ حدیث مکتبِ فکر کے نئے خطیب مقرر کردیے۔ انہوں نے بتایا کہ صوبائی حکومت کی جانب سے فراہم کی گئی فہرست کے بعد جماعت الدعوۃ کے مدارس کا پتہ لگانے کے لیے ضلع بھر میں سروے کا آغاز کردیا گیا۔ یاد رہے کہ جماعت الدعوۃ اور فلاح انسانیت فاونڈیشن پر پابندی کا نوٹیفیکیشن حکومت کی جانب سے 10 فروری کو جاری کیا گیا۔ اس سے قبل وفاقی حکومت نے جماعت الدعوۃ، لشکر طیبہ اور فلاح انسانیت سمیت دیگر کالعدم جماعتوں کے عطیات اور چندہ جمع کرنے پر بھی پابندی عائد کی تھی۔ دریں اثناء جماعۃالدعوۃ کے ترجمان یحییٰ مجاہد نے جماعۃالدعوۃ اورفلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے اثاثے منجمد کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کرنے پر شدید ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت بھارت و امریکہ کی خوشنودی کیلئے ملک بھر میں ہمارے تعلیمی اداروں، ایمبولینسوں، ڈسپنسریوں اور دیگر اثاثہ جات کوقبضہ میں لے رہی ہے جس سے ریلیف سرگرمیاں شدید متاثر ہوئی ہیں اور تعلیم و صحت سمیت دیگر رفاہی و فلاحی منصوبہ جات جاری رکھنامشکل بنا دیا گیا ہے۔ہم حکومت پاکستان کے ان غیر قانونی اور غیر آئینی اقدامات کیخلاف بھرپور قانونی جنگ لڑیں گے۔ بیان میں انہوں نے کہاکہ ماضی میں بھی حافظ محمد سعید و دیگر رہنماؤں کوبلا وجہ نظربند رکھا گیا اور اب ایک مرتبہ پھراثاثے منجمند کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کر کے پورے ملک میں جماعۃالدعوۃ اور فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے جاری رفاہی و فلاحی منصوبہ جات بند کر دیے گئے ہیں جس سے ہزاروں کی تعداد میں غرباء، یتامیٰ، بیوگان اور مستحق افراد متاثر ہوئے ہیں۔ ترجمان نے کہاکہ حکمران شاہ سے زیادہ شاہ کے وفادار ہونے کا ثبوت دے رہے ہیں۔


loading...
© Copyright 2018. All right Reserved