اتوار‬‮   27   مئی‬‮   2018

پاکستان مین یکطرفہ امریکی کاروائی کا بھرپور جواب دینگے،احسن اقبال

 

دہشت گردی کے خلاف جنگ میں 60 ہزار جانوں کا نذرانہ پیش کیا، انٹرویو

احسن اقبال سے برطانوی وزیر خارجہ کی ملاقات، انسداد دہشتگردی کی کوششوں کو سراہا

اسلام آباد،لندن (خصوصی نیوز رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ امریکا کی جانب سے پاکستان میں کسی بھی قسم کی یکطرفہ کارروائی کی صورت میںنہ صرف دو طرفہ تعلقات کو ناقابل تلافی نقصان ہوگا بلکہ اس کا جواب بھی دیا جائے گا۔ سی این این کو دیے گئے ایک انٹرویو میں وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ پاکستان میں کسی بھی طرح کی یکطرفہ کارروائی ریڈ لائن ثابت ہوگی۔ انھوں نے کہا کہ پاکستانی ایک باوقار قوم ہیں اور ہم باہمی اعتماد پر دوستی چاہتے ہیں لیکن پاکستان کو دبانے یا دبا ڈالنے کی کوئی بھی کوشش کی گئی تو اس کا جواب دیا جائے گا۔ وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ پاکستان دہشت گردی سے براہ راست متاثر ہوا ہے اور ہم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بے پناہ قربانیاں دی ہیں، 'دنیا میں کوئی ایسا ملک نہیں جس نے گزشتہ برسوں میں دہشت گردی کے خلاف اتنی قربانیاں اور اتنا تعاون کیا ہو جتنا پاکستان نے کیا ہے انھوں نے کہا کہ پاکستان نے اس جنگ میں 60 ہزار جانوں کا نذرانہ پیش کیا اور ہماری معیشت کو 25 ارب ڈالر کا نقصان اٹھانا پڑا۔ امریکا کی جانب سے پاکستان کو دی جانے والی امداد پر بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ہم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کے عزم کا اعادہ کیا ہے جبکہ امریکا یا یو ایس ایڈ کی جانب سے آنے والی امداد بہت معمولی ہے احسن اقبال کا کہنا تھا کہ پاکستان یہ جنگ امریکی امداد کے لیے نہیں لڑ رہا بلکہ ہم یہ جنگ اپنے لوگوں اور ان کے مستقبل کے لیے لڑ رہے ہیں۔ انٹرویو کے دوران انھوں نے واضح طور پر کہا کہ امریکا کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کی بات کی جائے تو ہمارا موقف واضح ہے کہ ہمیں امداد کی نہیں تجارت کی ضرورت ہے اور اسلام آباد امریکا کو ایک امداد دینے والے ملک کے بجائے اپنا ترقی کا ساتھی دیکھنا چاہتا ہے۔ دریں اثناء برطانیہ کے وزیر خارجہ بورس جانسن نے پاکستان کے اقتصادی اصلاحات کے ایجنڈے اور انسداد دہشت گردی کے لئے کوششوں کو سراہا ہے۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار بدھ کو یہاں وزیر داخلہ احسن اقبال کے ساتھ ملاقات کے دوران کیا۔ احسن اقبال نے برطانیہ کے وزیر خارجہ کو بتایاکہ سکیورٹی صورتحال میں بہتری مؤثر اقتصادی ترقی اور جمہوری اداروں کے استحکام کی وجہ سے پاکستان بے مثال تبدیلی کے عمل سے گزر رہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان اہم تجارتی و سرمایہ کاری شراکت دار کے طورپر برطانیہ کے کردار کو سراہتا ہے۔ انہوں نے برطانوی وزیر خارجہ کو دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خاتمے کے لئے پاکستان کی کوششوں کے بارے میں تفصیل سے آگاہ کیا ۔ برطانوی وزیر خارجہ نے بھی اعتراف کیاکہ پاکستان نے بھرپور اقتصادی ترقی کی صلاحیت موجود ہے۔ انہوں نے کہاکہ برطانیہ چین پاکستان اقتصادی راہدری میں گہری دلچسپی رکھتا ہے اور اس سے پیدا ہوانے والے مواقع سے فائدہ اٹھانا چاہے گا۔


loading...
© Copyright 2018. All right Reserved