بدھ‬‮   15   اگست‬‮   2018

وزرات داخلہ نیب کے خط پر عملدرآمد کرے،خورشید شاہ

اسلام آباد(نامہ نگار خصوصی)قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید احمدشاہ نے کہا ہے کہ نواز شریف،مریم نوازاور
کیپٹن صفدرکے نام ای سی ایل میں ڈالنے کے معاملے پروزرات داخلہ نیب کے خط پر عملدرآمد کرے،نیب خط پر عمل نہ کیا تو شرجیل میمن کو آزاد کرنا پڑے گا۔میثاق جمہوریت پر عملدرآمد میں نواز شریف بڑی رکاوٹ تھے،میثاق جمہوریت پر عمل ہوتا تو نواز شریف کو یہ دن نہ دیکھنا پڑتا،ججز تقرری کے طریقہ سے متعلق 18 ویں ترمیم میں نواز شریف نے رکاوٹ ڈالی۔نیب کی طرف سے وزارت داخلہ کو خط پر ردعمل دیتے ہوئے سید خورشیدشاہ نے وزارت داخلہ کو واضح پیغام دیا کہ وزارت داخلہ نیب کے خط پر عمل کر کے نواز شریف،مریم نواز اورکیپٹن صفدر کا نام ای سی ایل میں ڈالا جائے اگر وزارت داخلہ نے نیب کے خط پر عملدرآمد نہ کیا تو شرجیل میمن کوبھی آزادکرنا پڑے گا اوران کا نام ای سی ایل سے ہٹانا پڑے گا۔ خورشید شاہ نے کہا کہ قانون کے تحت سب کے ساتھ برابر سلوک کیا جانا چاہیے۔شریف خاندان کے خلاف ریفرنس ہے شرجیل میمن کے خلاف ریفرنس بھی نہیں۔شرجیل میمن خود پیش ہوئے تھے۔اس کے برعکس شریف خاندان کے لوگوں کو پکڑا گیا اور چھوڑا دیا گیا جو غیر قانونی تھا۔انہوں نے کہا کہ میثاق جمہوریت پر عملدرآمد میں نواز شریف بڑی رکاوٹ تھے۔نواز شریف نے میمو سکینڈل میں میثاق جمہوریت کا مذاق اڑایا تھا۔2014 میں ن لیگ ہاٹ واٹر میں آئی تو پی پی ساتھ کھڑی ہوئی۔


loading...
© Copyright 2018. All right Reserved