ہفتہ‬‮   20   اکتوبر‬‮   2018

ججوں کو اللہ کے سامنے جواب دینا پڑے گا،نواز شریف


بندہ چالیں چلتا رہتا ہے لیکن اللہ کی رضا کچھ اور ہوتی ہے، لودھراں عوام کا شکریہ



منافقت کی سیاست کرنیوالا صادق، امین ملکی خدمت کرنے والا نااہل قرارپایا



لاہور(وقائع نگار)پاکستان مسلم لیگ کے سربراہ وسابق وزیر اعظم میاں محمدنواز شریف نے کہاہے کہ ہمارا بیانیہ عوام کے دلوں میں گھر کر چکا ہے۔ووٹ کے تقدس کا پیغام ملک کےونے کونے میں لے کر جائیں گے۔ لودھراں کے ضمنی انتخاب کا جونتیجہ آیا وہ کوئی سوچ بھی نہیں سکتا تھا۔لودھراں کے عوام کا مشکور ہوں، دل چاہتا ہے کہ وہاں جا کر عوام کا شکریہ ادا کروں، یہ اللہ کی رضا اور فیصلہ ہے۔ عدالتوں میں بیٹھے منصفوں کو بھی اللہ تعالیٰ کی بارگاہ میں جوابدہ ہونا ہے، بیٹے سے تنخواہ نہ لینے پر مجھے نا اہل کر دیا گیا۔ملک میں ووٹ کا احترام نہیں رہا اسے بحال اور قائم کرنا ہے، ووٹ کا احترام ہوگا تو ملک آگے بڑھے گا، تمام طبقوں کو ووٹ کا احترام کرنا چاہیے۔مفتی محمدحسین نعیمی ؒ اورڈاکٹر سرفراز نعیمی کی دینی وملی خدمات قابل ستائش ہیں۔جامعہ نعیمیہ سے تعلیم وتربیت کاحصول میر ے لیے فخرکی بات ہے۔یہ ادارہ نصف صدی سے زائد عرصہ سے دین اسلام اور ملک وقوم کی خدمت میں مصروف عمل ہیں۔نعیمی خاندان سے ہمارا روحانی رشتہ کئی دہائیوں سے قائم ہے اورانشاء اللہ تاحیات قائم رہے گا۔ان خیالات کاظہار انہوں نے گزشتہ روزبانی جامعہ نعیمیہ مفتی محمدحسین نعیمیؒ کی اہلیہ اورڈاکٹر سرفراز احمد نعیمی شہیدؒ کی والدہ ماجدہ کے انتقال پرناظم اعلیٰ جامعہ نعیمیہ وممبر اسلامی نظریاتی کونسل علامہ ڈاکٹر محمدراغب حسین نعیمی سے اظہارتعزیت کے بعد ان کی رہائش گاہ پرمیڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پرپروفیسر محفوظ ا لرحمان نعیمی،تاجور نعیمی،رکن صوبائی اسمبلی نبیرہ عندلیب نعیمی،راشد نعیمی،محمدعاطق نعیمی،محمداکبر،صاحبزادہ محمدعبداللہ،صاحبزادہ محمدحسین نعیمی دیگر اہل خانہ کے افراد بھی موجود تھے ۔انہوں نے مزید کہاکہ ہم خلوص سے ملک کی خدمت کر رہے تھے لیکن بیٹے سے تنخواہ نہ لینے پر مجھے نااہل اور جھوٹا قرار دے دیا گیا، انصاف کی کرسی پر بیٹھے لوگ اللہ کے حضور کیا جواب دیں گے اور انہیں سب سے زیادہ جواب دہ ہونا ہے۔ انصاف کی کرسی پرموجود لوگوں کی اللہ کے حضور سب سے زیادہ پوچھ ہوگی۔، مخالفین کو سوچنا چاہیے کہ انہوں نے گالی اور الزام تراشی کی سیاست کر کے لوگوں کو خراب کیا ہے۔ ووٹ کا تقدس ہونا چاہیے، 20 کروڑ عوام کے مینڈیٹ کی توہین نہیں ہونی چاہیے۔ گالی گلوچ اورالزام تراشی کی سیاست کرنے والوں کو صادق اورامین قراردیا گیا اورہم جوعوام کی خدمت کررہے ہیں انہیں گھربھیج دیا گیا۔ مخالفین کیلئے لمحہ فکریہ ہے کہ انہوں نے منافقت اورجھوٹ کی سیاست کی ہے، عمران خان نے سیاست کوخراب کیا اورگالی گلوچ کا کلچرمتعارف کروایا، دل چاہتا ہے کہ لودھراں جاکر وہاں کے عوام شکریہ ادا کروں۔



© Copyright 2018. All right Reserved