جمعہ‬‮   27   اپریل‬‮   2018

جسٹس اعجازکے گھرفائرنگ کی ابتدائی رپورٹ چیف جسٹس کو پیش


لاہور،اسلام آباد(نیوزرپورٹر،نیوزایجنسی) پولیس نے جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر فائرنگ کے واقعے کی ابتدائی رپورٹ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کو ارسال کردی، فائرنگ واقعے سے پولیس کو صبح 10 بج کر 45 منٹ پر آگاہ کیا گیا،پاکستان رینجرز کے شفٹ انچارج نائیک عبدالرزاق نے شکایت درج کروائی، گولی جسٹس اعجاز کے گھر کے مین گیٹ کے بالائی حصے پر لگی ۔ تفصیلات کے مطابق لاہور کے علاقے ماڈل ٹان میں گزشتہ روز نامعلوم افراد نے سپریم کورٹ کے جج جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر فائرنگ کی تھی۔ پولیس نے واقعے کی ابتدائی رپورٹ چیف جسٹس کو پیش کردی جس کے مطابق فائرنگ کے واقعے سے پولیس کو صبح 10 بج کر 45 منٹ پر آگاہ کیا گیا۔ پاکستان رینجرز کے شفٹ انچارج نائیک عبدالرزاق نے شکایت درج کروائی۔پولیس رپورٹ کے مطابق جسٹس اعجاز کے گھر کے مین گیٹ کے بالائی حصے پر گولی لگی، پنجاب فرانزک ایجنسی کو تجزیہ کرنے کے لیے بلایا گیا، جس نے تمام شواہد اور ریکارڈ کو محفوظ کرلیا،۔ابتدائی تحقیقات کے مطابق گولی کافی فاصلے سے فائر کی گئی ہے، جس سمت سے گولی آئی تھی اس پر تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے، اس ضمن میں قریبی علاقوں میں سرچ آپریشنز بھی کیے گیے ہیں، پنجاب فرانزک ایجنسی نے موقع سے ملنے والی گولی فائر آرمز اینڈ ٹول مارکس میں مشاہدے کیلیے بھجوا دی ہے۔جبکہ ایک کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے کہا ہے کہ سپریم کورٹ کے جج جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر فائرنگ کے واقعہ کی تحقیقات میں اب تک کوئی پیش رفت نہیں ہوئی، معاملے کا جائزہ لے رہے ہیں۔چیف جسٹس نے جسٹس اعجاز الاحسن کی رہائشگاہ پر فائرنگ کے واقعے کے بعد اظہار یکجہتی پر سپریم کورٹ بار اور پاکستان بار کونسل کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ ہمیں اپنی بار پر فخر ہے ۔ فٹبال فیڈریشن کے انتخابات سے متعلق کیس میں صدر فٹبال فیڈریشن فیصل صالح حیات کو آج طلب کر لیا ہے ۔ چیف جسٹس نے کہا کہ کھیل میں سیاست لاکر ملک کی عزت خاک میں ملائی جاتی ہے حالت یہ ہے کہ اولمپکس میں پاکستان کی ٹیم کی شرکت خطرے میں تھی لیکن عدالت نے مداخلت کرکے مسئلہ حل کیا لیا ہے ،چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی تو تنا زع با رے ریمارکس دیتے ہوئے چیف جسٹس نے کہا کہ ضرورت پڑی تو فیصل صالح حیات کو معطل کر دینگے، فریقین میں تنازع پنجاب کی نمائندگی کا ہے اس لئے پہلے پنجاب کے الیکشن کروا لیتے ہیں،کیس کی مزید سماعت آج دوبارہ ہوگی ۔
پیش


loading...
© Copyright 2018. All right Reserved