منگل‬‮   16   اکتوبر‬‮   2018

وزیر اعظم ملک کیساتھ ہیں یا نواز شریف کے بیانیے کے،پی پی پی ،پی ٹی آئی کا وضاحت مانگنے کا فیصلہ


اسلام آباد( نامہ نگار خصوصی ،نیوز ایجنسیاں) وزیر اعظم ملک کیساتھ ہیں یا نواز شریف کے بیانئے کے پیپلز پارٹی اور پی ٹی آئی کا وضاحت مانگنے کا فیصلہ پیپلز پارٹی دیگر جماعتوں سے بھی معاملے پر مشاورت کرے گی۔پیپلز پارٹی نے نواز شریف کے ممبئی حملوں سے تعلق بیان پر وزیرِاعظم شاہد خاقان عباسی سے وضاحت مانگنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس بات کا فیصلہ چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو اور شریک چیئرمین آصف علی زرداری کیمشترکہ قیادت میں کراچی میں ہونے والے پارٹی کے اہم اجلاس کیا گیا۔اجلاس میں طے کیا گیا کہ نیشنل سیکیورٹی کمیٹی کے حالیہ اجلاس میں اس حوالے سے وزیرِاعظم سے ان کا موقف بھی معلوم کیا جائے گا۔ فیصلہ کیا گیا ہے کہ وزیرِاعظم نیشنل سیکیورٹی کمیٹی میں اپنے دئیے گئے موقف سے پارلیمنٹ کو آگاہ کریں جبکہ اس معاملے پر پیپلز پارٹی دیگر جماعتوں سے بھی مشاورت کرے گی۔ اجلاس میں شیری رحمان، نثار کھوڑو، خورشید شاہ اور دیگر اہم رہنما شریک ہوئے دریں اثناپاکستان تحریک انصاف نے نوازشریف کے متنازع بیان پر وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے وضاحت طلب کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ذرائع کے مطابق تحریک انصاف نے فیصلہ کیا ہے کہ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے وضاحت طلب کی جائیگی،وہ بتائیں کہ وہ نوازشریف کے بیانیے کیساتھ ہیں یا پاکستان کیساتھ؟۔تحریک انصاف اس معاملے پر اپوزیشن جماعتوں سے رابطے کرے گی اور اپنے 4مطالبات سے متعلق اپوزیشن رہنماؤں کو قائل کرے گی۔دوسری جانب قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ نوازشریف نے جو کہا اس میں غلط کیا ہے،نوازشریف بتائیں اس بیان کی ضرورت کیا تھی؟۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ نوازشریف پاکستان کو بدنام کرنیکا کوئی موقع نہیں چھوڑ رہے،ان کے بیان سے ہم گرے لسٹ سے بلیک لسٹ کی جانب جارہے ہیں۔اس کے علاوہ فواد چوہدری نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کی ریاست اوراداروں کیساتھ ہمدردی نہیں،ملک کو اس نہج پر پہنچانے کے ذمہ دار نوازشریف ہیں

پی پی ، پی ٹی آئی



© Copyright 2018. All right Reserved