جمعرات‬‮   18   اکتوبر‬‮   2018

انسانی جانوں سے کھیلنے والوں کیخلاف کارروائی کی جائے،جسٹس قیصر رشید

انسانی جانوں سے کھیلنے والوں کیخلاف کارروائی کی جائے،جسٹس قیصر رشید
ایف آئی اے صرف اکائونٹ ڈھونڈنے پر توانائی خرچ نہ کرے، دوسری بھی ذمہ داریاں بنتی ہے
پشاور(بیورورپورٹ)پشاور ہائی کورٹ کے جسٹس قیصر رشید نے کہا ہے کہ غیر قانونی طریقے سے انسانی اعضاء کی پیوندکاری کیخلاف ایف آئی اے نہ کیا اقدامات کئے ہیں ایف آئی اے صرف لوگوں کے اکائونٹ ڈھونڈنے پر توانائی صرف نہ کرے ان کی دوسری بھی ذمہ داریاں بنتی ہے‘ عدالت کو مکمل رپورٹ دی جائے جبکہ ہیلتھ کیئر کمیشن بھی ایسے عناصر کیخلاف سخت کارروائی کرے جو انسانی جانوں کے ساتھ کھیل رہے ہیں اور اس حوالے سے ایک جامع رپورٹ بھی عدالت میں فراہم کی جائے یہ ریمارکس فاضل بنچ نے کوہاٹ کے رہائشی محمد اللہ کی رٹ کی سماعت کے دوران دئیے دو رکنی بنچ جسٹس قیصر رشید اور جسٹس قلندر علی خان پر مشتمل تھا عدالت نے کیس کی سماعت شروع کی تو اس دوران درخواست گزار کے وکیل ملک اجمل خان نے عدالت کو بتایا کہ اس کے موکل کا چچا حاجی حبیب جو بیرون ملک سے گردوں کی مرض کی تشیخص کیلئے آیا تھا ‘ خیبرپختونخوا کے مختلف ہسپتالوں سے معائنہ کیا تاہم یہ بات سامنے آئی کہ اس کے گردے مکمل طور پر ناکارہ ہو چکے ہیں اس حوالے سے اسلام آباد میں واقع ایک پرائیویٹ ہسپتال کے انچارج نے اس کو گردہ کے ٹرانسپلانٹ سے متعلق مشورہ دیا اور یہ بھی وعدہ کیا کہ وہ اس کیلئے ڈونر بھی فراہم کردے گا‘ اس سارے عمل میں چکلالہ کے رہائشی امین شاہ بھی پیش پیش رہے ‘ بعد میں ڈاکٹر محمد اشفاق نے فیصل آباد کے رہائشی عرفان سے گردہ نکال کر درخواست گزار کے چچا کو لگانے کیلئے آپریشن شروع کیا تاہم دوران آپریشن اس کے موکل کی حالت غیر ہوگئی اور اسے ایمبولینس میں اسلام آباد میں ایک نجی ہسپتال منتقل کیاگیا جہاں پر ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دیدیا‘ انہوں نے عدالت کو بتایا کہ ابھی تک ایف آئی اے متعلقہ ملزمان کیخلاف کوئی کارروائی نہ کر سکی جبکہ یہ روز کا معمول بن گیا ہے‘ جس پر عدالت نے وہاں موجود سید سکندر شاہ ایڈیشنل ایڈوکیٹ جنرل کو ہدایت کی کہ متعلقہ حکام کو بلائیں‘ کیس کی دوبارہ سماعت شروع ہوئی تو ہیلتھ کیئر کمیشن کے سی ای او سکوارڈن لیڈر (ر) آزر سردار عدالت میں پیش ہوئے اور عدالت کو بتایا کہ کمیشن نے 1700کے قریب اسی نوعیت کے ہسپتالوں ‘ کلینکس اور پرائیویٹ لیبارٹریوں کو سیل کیا ہے اور کسی کو نہیں چھوڑا جا رہا ‘ یہ انسانی دشمن ہیں جن کیخلاف کمیشن کارروائی کر رہا ہے
جسٹس قیصر رشید

© Copyright 2018. All right Reserved