اتوار‬‮   9   دسمبر‬‮   2018

پاکستان منی لانڈرنگ اوردہشگردوں کی فنڈنگ روکے،ایف اے ٹی ایف



پاکستان منی لانڈرنگ اوردہشگردوں کی فنڈنگ روکے،ایف اے ٹی ایف
3 سے 15 ہزار ڈالرز اور یورو کی کاروباری ٹرانزیکشنز کا ریکارڈ مرتب کیاجائے
اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)فنانشل ایکشن ٹاسک فورس ایشیا پیسفک گروپ نے منی لانڈرنگ روکنے کیلئے پاکستان سے 3 سے 15 ہزار ڈالرز اور یورو کی کاروباری ٹرانزیکشنز کا ریکارڈ مرتب کرنے کا مطالبہ کردیا۔منی لانڈرنگ اور دہشت گردوں کی فنڈنگ روکنے کے لئے بھی سخت اقدامات کرنے کا مطالبہ کردیا، پاکستان ہر طرح کے لین دین اور کاروبار کو دستاویز کی شکل میں درج کرے۔ وکلا، اکاونٹنٹ، ٹرسٹ اور خدمات مہیا کرنے والی کمپنیز کو بھی اس دائر کار میں لایا جائے۔ذرائع وزارت خزانہ کے مطابق اسلام آباد میں ہونے والے پاکستان اور فنانشل ٹاسک فورس ایشیا پسیفک گروپ کے اجلاس میں ایف اے ٹی ایف کی جانب سے مطالبات کی نئی فہرست پاکستان کو پیش کردی گئی۔ایف اے ٹی ایف نے منی لانڈرنگ اور دہشت گردوں کی فنڈنگ روکنے کے لئے بھی سخت اقدامات کرنے کا مطالبہ کردیا۔ بدھ کے روز ہونے والے اجلاس میں ایف اے ٹی ایف ایشیا پیسفک کے وفد نے پاکستان سے رئیل اسٹیٹ، سونے اور قیمتی دھاتوں کی بیوپاری کے ریکارڈز بھی دستاویزات کی صورت میں مرتب کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔منی لانڈرنگ اور دہشتگردوں کو مالی معاونت روکنے کیلئے بھی جلد منصوبہ بندی کرنے کی ہدایت کی ہے ،ایف اے ٹی ایف کے مطابق پاکستان ہر طرح کے لینے دین اور کاروبار کو دستاویز کی شکل میں درج کرے۔ وکلا، اکاونٹنٹ، ٹرسٹ اور خدمات مہیا کرنے والی کمپنیز کو بھی اس دائر کار میں لایا جائے۔وزارت خزانہ کے حکام کے مطابق نئے اقدامات کے بعد تمام خدمات مہیا کرنے والی کمپنیز اپنی تمام کیش ٹرانزیکشنز کا ڈیٹا فنانشل مانیٹرنگ یونٹ کو مہیا کرنے کی مجاز ہونگی۔
ایف اے ٹی ایف

© Copyright 2018. All right Reserved