منگل‬‮   20   ‬‮نومبر‬‮   2018

شمالی وزیرستان میں بارودی سرنگ کے دھماکہ، پاک فوج کا کیپٹن شہید، تین اہلکار زخمی

تین کالم ذیلیاں
مہند گھاٹ مہمند میں بارودی سرنگ کو ہٹاتے ہوئے کیپٹن ضرغام فرید نے جام شہادت نوش کیا
سپاہی ریحان، قاسم ، امجد اور ظہیر زخمی ، سکیورٹی فورسز نے علاقہ کو گھیرے میں لیکر سر چ آپریشن شروع کردیا
بنوں ،راولپنڈی(نامہ نگار، نیوزایجنسیاں) فرض کی ادائیگی کے دوران دھرتی کا ایک اور بیٹا کیپٹن ضرغام فرید مہمند ایجنسی میں شہید ہوگیا۔ترجمان پاک فوج میجر جنرل آصف غفور کے مطابق مہند گھاٹ، ضلع مہمند میں بارودی سرنگ کو ہٹاتے ہوئے کیپٹن ضرغام فرید نے جام شہادت نوش کیا جب کہ واقعے میں بم ڈسپوزل اسکواڈ کے سپاہی ریحان شدید زخمی ہو گئے۔ڈی جی آئی ایس پی آر نے بتایا کہ شہید کیپٹن ضرغام کی عمر 25 برس تھی اور تعلق سرگودھا سے تھا جب کہ وہ غیر شادی شدہ تھے ،بنوں سے نامہ نگار کے مطابق شمالی وزیرستان میں سکیورٹی فورسز کے قریب بارودی مواد کا دھماکہ ، تین سکیورٹی اہلکار زخمی ہو گئے ذرائع کے مطابق سکیورٹی فورسز کی گاڑی گڑیوم کے علاقہ روغہ بدر میں معمول کے مطابق گزشت پر تھی کہ سڑک کنارے پہلے سے نصب بارودی کی زد میں گاڑی آ گئی اور دھماکہ ہوا جس کے نتیجے میں تین سکیورٹی اہلکار سپاہی قاسم ، امجد اور ظہیر زخمی ہو گئے جنہیں قریبی ہسپتال پہنچایا گیا واقعہ کے بعد سکیورٹی فورسز نے علاقہ کو گھیرے میں لیکر سر چ آ پریشن شروع کر دی اسی طرح سکیورٹی فورسز نے شمالی وزیرستان میرانشاہ بائی پاس روڈ پرپہلے سے نصب شدہ بارودی مواد کو ناکارہ بنا دیا
کیپٹن شہید

© Copyright 2018. All right Reserved