بدھ‬‮   21   ‬‮نومبر‬‮   2018

بنوں، کنٹونمنٹ بورڈ کےاضافی ٹیکسوں کیخلاف تاجروں کا احتجاج،مین روڈ بند کرنے کی دھمکی

تین کالم۔۔۔بنوں، کنٹونمنٹ بورڈ کےاضافی ٹیکسوں کیخلاف تاجروں کا احتجاج،مین روڈ بند کرنے کی دھمکی
ضرب عضب آپریشن کی وجہ سے بنوں میں کاروباری طبقہ پہلے ہی شدید خسارے میں ہے،نئے ٹیکس برداشت نہیں کرسکتے
دوہرا ٹیکس کسی صورت قبول نہیں ،ظلم سہنے کے بجائے سڑکوں پر نکلنے اور عدالت جانے کو ترجیح دینگے،تاجر رہنمائوں کا خطاب
بنوں( نمائندہ خصوصی) کینٹ مارکیٹ کے دکانداروں کا کنٹونمنٹ بورڈ کی جانب سے دکانوں پر لگائے گئے اضافی ٹیکس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ۔ کنٹونمنٹ بورڈ کے اقدام کے خلاف شید نعرہ بازی کی گئی ٹیکس واپس نہ لینے کی صورت میں بنوں میرانشاہ روڈ کو بند کرنے کی دھمکی دے دی ۔ کاروباری لوگ اخر کہاں جائیں ٹیکسوں نے ان کی کمر توڑ کر رکھ دی ہے مزید برداشت سے باہر ہے ان خیالات کا اظہار مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے آل جنوبی اٖضلاع ٹریول ایجنٹس ایسوسی ایشن کے صدر ملک سلیم الرحمن، سابقہ امیدوار قومی اسمبلی ملک عثمان علی خان ، ملک جہان زیب خان ، عمر نواز خان و دیگر نے کیا انہوں نے کہا کہ بنوں میں کاروبار نہ ہونے کے برابر ہے اور ضرب عضب آپریشن کی وجہ سے بھی یہ علاقہ کافی متاثر ہوا ہے انتہائی مشکل حالات میں وقت گزار رہے ہیں اوپر سے کنٹونمنٹ بورڈ نے دکانات پر ایسی صورت میں مزید ٹیکس لگا دیا ہے ۔ ایک پستول کے دو لائسنس نہیں بن سکتے تو ہم سے ایک دکان کے ڈبل ٹیکس کیوں لئے جا رہے ہیں انہوں نے کہا کہ یہ ٹیکس کسی صورت بھی ماننے کے لئے تیار نہیں ۔ ظلم برداشت کرنے کی بجائے اس کے خلاف روڈ پر نکل انے اور ان کے خلاف عدالت جانے کو ترجیح دیں گے انہوں نے دھمکی دیتے ہوئے مطالبہ کیا کہ یہ دوہرا ٹیکس فوری واپس لیا جائے بصورت دیگر ہم بنوں میرانشاہ روڈ کو ٹریفک کے لئے بند کرنے سے دریغ نہیں کریں گے ۔
تاجر احتجاج

© Copyright 2018. All right Reserved